لاہور: زیادتی کے بعد قتل ہونے والے بچے کی لاش دریائے راوی کے قریب سے مل گئی

0
136
updates

لاہور کے علاقے اقبال ٹاؤن سے یکم اکتوبر کو اغوا کئے گئے 9 سالہ بچے کی لاش دریائے راوی کے قریب سے مل گئی، بچے کو مبینہ طور پرمحلے دار اوباش شخص نے زیادتی کے بعد قتل کیا، ملزم بھی بعد میں مبینہ پولیس مقابلے میں مارا گیا، مقتول بچے کے گھر میں صفِ ماتم بچھی ہوئی ہے۔

نجف کالونی اقبال ٹاؤن کے ایک گھر میں 2 دن پہلے تک 9 سالہ علی رضا کی شرارتوں اور شوخیوں کی وجہ سے زندگی کی رونقیں عروج پر تھیں لیکن اب یہ گھرانا غم میں ڈوبا ہواہے۔

متاثرہ فیملی نے بتایا کہ یکم اکتوبر کو علی رضا گھر سے نکلا پھر واپس نہ آیا، انہوں نے رپورٹ درج کرائی، محلے دار اوباش شخص نعیم پر شبہ بھی ظاہر کیا مگر پولیس نے اسے گرفتار نہ کیا۔

دوسرے دن اہل خانہ کے احتجاج پر ملزم کو پکڑاتو اس نے زیادتی کے بعد بچے کے قتل کا اعتراف کر لیا، ملزم کے بتائے گئے مقام سے بچے کی لاش بھی برآمد کرلی گئی۔

بچے کے والد کا شکوہ ہے کہ پولیس ان کی نشاندہی پر بَروقت کارروائی کرکے ملزم کو پکڑ لیتی تو ان کا بیٹا قتل نہ ہوتا جبکہ پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم نعیم کو نشاندہی کیلئے لے جایا جارہا تھا کہ اس کے ساتھیوں نے اسے فرار کرانے کی کوشش کی،اس دوران فائرنگ کے تبادلے میں ملزم مارا گیا اور اس کے ساتھی فرار ہوگئے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here