مالدار بننے سمیت انسان کی وہ 24خواہشات جن کا حضور پاک ﷺ نے حل بتادیا

0
91
Subhanallah-image

حضرت خالد بن ولیدؓ فرماتے ہیں کہ ایک آدمی حضور نبی کریم کے پاس آیا اور عرض کی ، میں آپ سے دنیاو آخرت کے بارے میں کچھ پوچھنا چاہتا ہوں؟
آپ نے فرمایا : جو چاہو پوچھو!
اس نے کہا : اے اللہ کے نبی میں چاہتا ہوں کہ سب سے بڑا عالم بن جاﺅں ؟
آپ نے فرمایا: اللہ سے ڈر، تو بڑا عالم بن جائے گا۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں سب سے بڑا مالدار بن جاﺅں ؟
آپ نے فرمایا: قناعت اختیار کر! تو سب سے بڑا مالدار بن جائے گا۔
آپ نے کہا: میں چاہتا ہوں کہ سب سے اچھا انسان بن جاﺅں گا؟
آپ نے فرمایا: اچھا انسان وہ ہے جو لوگوں کو نفع پہنچائے ، تو لوگوں کو نفع پہنچا، اچھا آدمی بن جائے گا۔
اس نے کہا: میں چاہتا ہوں کہ سب سے زیادہ عدل کرنے والا بن جاﺅں ؟
آپ نے فرمایا : اللہ تعالیٰ کا ذکر کثرت سے کیا کر! تو اللہ کا خاص بندہ بن جائے گا۔
اس نے کہا: میں چاہتا ہوں کہ میں بہت نیک بن جاﺅں گا؟
آپ نے فرمایا : اللہ کی عبادت یوں کیا کر کہ تو اسے دیکھ رہا ہے اگر ایسا نہ ہوسکے کم از کم یوں عبادت کر ، کہ اللہ تعالیٰ تجھے دیکھ رہا ہے۔ بڑا عبادت گزر بن جائے گا۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ میرا ایمان کامل ہوجائے؟
آپ نے فرمایا: اپنے اخلاق اچھے کرلو تمہارا ایمان کامل ہو جائے گا۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ فرمانبردار بن جاﺅں ؟
آپ نے فرمایا: فرائض باقاعدگی سے ادا کرتے رہو فرماں بردار بن جاﺅ گے ۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ روز قیامت گناہوں سے پاک اٹھا یا جاﺅں؟
آپ نے فرمایا: غسل جنابت خوب اچھی طرح کیا کرو ، روز قیامت بغیر گناہ کے اٹھائے جاﺅگے ۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ روز قیامت نورہی نور میں اٹھایا جاﺅں ؟
آپ نے فرمایا: کسی پر ظلم نہ کرو اور روز قیامت نور میں اٹھائے جاﺅ گے ۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ میرا رب مجھے پر رحم کرے ؟
آپ نے فرمایا: تو اپنی جان پر اور مخلوق خدا پر رحم کر اللہ تجھ پررحم کرے گا۔
اس نے کہا: میں چاہتا ہوں کہ میرے گناہ کم ہوجائیں ؟ آپ نے فرمایا: استغفار کیا کرو ، تیرے گناہ جھڑ جائیں گے ۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ لوگوں میں بڑا عزت والا بن جاﺅں ؟
آپ نے فرمایا: خدا کا شکوہ مخلوق کے آگے نہ کیا کرتو بڑا آدمی بن جائے گا۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ میرا روزق بڑھادیا جائے ؟
آپ نے فرمایا: ہمیشہ پاک (باوضو) رہا کر تیرا رزق بڑھا دیاجائے گا۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ حق تعالیٰ اور اس کے رسول کا پسندیدہ بن جاﺅں ؟
آپ نے فرمایا : اس چیز کو پسند کر جسے اللہ تعالیٰ اور رسول پسند کرتے ہوں اور اس چیز کو ناپسند جان جس کو اللہ اور اس کے رسول ناپسند بتائیں۔
اس نے کہا: میں چاہتا ہوں کہ حق تعالیٰ کی ناراضگی سے بچ جاﺅں؟
آپ نے فرمایا: کسی پر غصہ نہ کیا کر ، حق تعالیٰ کی ناراضگی اور اس کے غصے سے بچ جائے گا۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ مستجاب الدعوات بن جاﺅں ، میری دعائیں قبول ہونے لگیں؟
آپ نے فرمایا: حرام کھانے بچتا رہ ، تیری دعائیں قبول ہوں گی۔
اس نے کہا : میں چاہتا ہوں کہ اللہ تعالیٰ مجھے روز قیامت سب بندوں کے سامنے رسوانہ کرے۔
آپ نے فرمایا: اپنی شرمگاہ کی حفاظت کر، اللہ تعالیٰ تجھے بندوں کے سامنے رسوا نہیں کرے گا۔
اس نے کہا: میں چاہتا ہوں کہ اللہ تعالیٰ میرے عیب چھپالے؟
آپ نے فرمایا: تو اپنے بھائیوں کے عیب چھپالے ، اللہ تعالیٰ تیرے عیوب لوگوں سے چھپائے گا۔
اس نے کہا : اللہ تعالیٰ کن چیزوں کے ساتھ بندوں کی خطاﺅں کو مٹا دیتا ہے؟
آپ نے فرمایا: نادم ہوکر رونے ، دھونے اور بیماریوں کے ساتھ ۔
اس نے کہا: کون سی نیکی اللہ تعالیٰ کے ہاں افضل ہے؟
آپ نے فرمایا: اچھے اخلاق ، عاجزی ، مصائب پر صبر اور اللہ تعالیٰ کے فیصلوں پر راضی ہونا۔
اس نے کہا: کون سی برائی اللہ کے ہاں سب سے بڑھ کر ہے؟
آپ نے فرمایا: برے اخلاق اور بخل۔
اس نے کہا : کیا چیز رحمن کے غضب کو ٹھنڈا کردیتی ہے ؟
آپ نے فرمایا: چپکے چپکے صدقہ کرنا ، صلہ رحمی کرنا۔
اس نے کہا: کیا چیز نار جہنم کو بجھا دیتی ہے؟
آپ نے فرمایا: روزہ ۔ (بحوالہ ،امت،بے مثال واقعات)

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here