دنیا سے رابطہ رکھے بغیرگھپ اندھیرے میں رہنا نوجوان کو مہنگا پڑگیا، لینے کے دینے پڑگئے

0
30

سڈنی (پاکستان 247نیوز) آسٹریلیامیں تاش اور جوئے کے کھلاڑی کو دنیا سے رابطہ منقطع کرکے ایک ماہ تک گھپ اندھیرے میں رہ کر شرط جیتنے کی کوشش مہنگی پڑگئی اورلینے کے دینے پڑگئے۔
تفصیل کے مطابق کھلاڑی رِچ الاٹی کو ان کے ایک دوست روری ینگ نے پیشکش کی کہ اگر وہ 30 روز تک کسی سے رابطے کے بغیر تنہا ایک گھپ اندھیرے کمرے میں گزارے تو وہ اسے ایک لاکھ ڈالر انعام میں دے گالیکن شرط ہارنے پر الٹا سے ہی ایک لاکھ ڈالر ہرجانہ ادا کرنا پڑے گا۔ اس شرط کا مقصد کسی شخص کے اعصاب کی مضبوطی کو نوٹ کرنا تھا۔
گزشتہ سال اکیس نومبر کو لاس ویگاس میں ایک چھوٹا مگر تاریک کمرہ بنایا گیاجہاں ایک بستر، غسل کی جگہ، کھانے پینے کی چیزوں سے بھرا فریج (وہ بھی لائٹ کے بغیر) اور غسل کی تمام ضروری اشیا رکھی گئی تھیں۔رچ کا بیرونی دنیا سے رابطہ بند تھا اور اسے روشنی کی کوئی شے پاس رکھنے کی اجازت نہ تھی۔ رچ کو وقفے وقفے سے پیشاب کے نمونے جمع کرانے تھے تاکہ ثابت ہوسکے کہ وہ اس کے لیے کوئی دوا تو نہیں کھارہا تاہم اسے اپنی پسند کا کھانا کھانے کی اجازت تھی۔
یہ کھانا روری خود لاتا تاکہ وہ رِچ کی دماغی کیفیت کا جائزہ بھی لے سکے تاہم رچ کو بتائے بغیر اس نے لائیو اسٹریمنگ کا کیمرا لگادیا تھا تاکہ اس کے اہلِ خانہ اسے دیکھ سکیں جو 24 گھنٹے اس کی ویڈیو نشر کررہا تھااور کسی بھی ناخوشگوار صورتحال کا بھی جائزہ لیاجاسکے۔ابتدائی طورپر نوجوان یہ شرط جیتنے کے لیے پرجوش تھا لیکن بیسویں روز جیسے ہی اس کا دوست کھانا لایا تو اس کے دوست نے اسے 25 ہزار ڈالر کے بدلے شرط ختم کرنے کا کہا لیکن پھر رقم بڑھا کا 62 ہزار 400 ڈالر کردی اور یوں 20 روز بعد رچ کی ہمت جواب دے گئی۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here