ڈالر نے پاکستانیوں کا ایک اور نقصان کردیا، موٹرسائیکل بھی غریب کی پہنچ سے باہر ہونے لگی

0
78
Suzuki-Honda-Pakistan-increase-bike-prices

کراچی (پاکستان 247نیوز)موجودہ حکومت کے اقتدار سنبھالنے کے بعد ڈالر کی قدرمیں کمی اوردیگر اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا لیکن اب عوامی سواری موٹرسائیکل بھی پاکستانیوں کی پہنچ سے باہر ہونے لگاہے کیونکہ ایک طرح ٹریفک پولیس کی پابندیاں تو دوسری طرف ڈالر کی قدر بڑھنے کی وجہ سے قیمتوں میںچھ ہزار روپے تک کا اضافہ ہوگیا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان میں کام کرنیوالی دو معروف کمپنیوں نے ڈالر کی قدر میں اضافے کی وجہ سے قیمتوں میں چھ ہزار روپے تک کا اضافہ کردیا، ڈالر کی قدر بڑھنے سے درآمدشدہ پارٹس کی قیمت بڑھ گئی ہے ۔ سوزوکی کمپنی نے اپنی جی آر150کی قیمت دولاکھ انتیس ہزار روپے سے بڑھا کر دو لاکھ پینتیس ہزار روپے ،جی ڈی110کی قیمت پانچ ہزار روپے کے اضافے سے ڈیڑھ لاکھ روپے تک جاپہنچی ۔ نجی نیوز ویب سائٹ کے مطابق گزشتہ تین ماہ کے دوران سوزوکی کمپنی نے 5660موٹرسائیکلیں بیچیں۔

اسی طرح ہنڈا نے بھی اپنی موٹرسائیکلوں کی قیمت میں چارہزار روپے تک کااضافہ کردیا۔ عام استعمال ہونیوالی ہنڈا سی ڈی 70کی قیمت ساڑھے پینسٹھ ہزار سے بڑھ کر پینسٹھ ہزار نو سوروپے تک جاپہنچی ، اسی طرح ہنڈا پرائیڈور کی قیمت نوے ہزار نو سو سے بڑھ کر اکیانوے ہزار چار سوتک جا پہنچی، سب سے زیادہ اضافہ ہنڈا نےسی بی 150 ایف کی قیمت میں کیا جو ایک لاکھ بہتر ہزار روپے سے بڑھ کر ایک لاکھ چہتر ہزار تک پہنچ گئی ۔ ہنڈا کمپنی نے بھی گزشتہ تین ماہ میں ماضی کی نسبت زیادہ موٹرسائیکلیں فروخت کیں اور اب یہ بھی فیصلہ کیا ہے کہ پیداواری صلاحیت مزید بڑھائیں گے اور اس ضمن میں 15ملین ڈالر کی کثیر رقم خرچ کرے گی ۔ اس سے قبل ہنڈا یہ بھی کہہ چکی ہے کہ روپے کی قیمت میں کمی کی وجہ سے موٹرسائیکلوں کی قیمتوں میں اضافہ ناگزیر ہے ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here