استنبول میں قتل ہونیوالے سعودی صحافی کی منگیتر نے بھی خاموشی توڑدی، دردناک کہانی سنادی

0
60
Khashoggi’s-fiancee-breaks-silence-on-his-murder-at-Saudi-consulate

استنبول(پاکستان ٹوئنٹی فورسیون نیوز) گزشتہ دنوں استنبول میں سعودی قونصل خانے کے اندر آئے امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ سے وابستہ سعودی صحافی جمال خاشقجی کو قتل کردیاگیا جس کی تصدیق سعودی حکام نے بھی کردی تھی اور اب ان کی ترک منگیتر نے بھی بالآخر خاموشی توڑدی اور بتایا کہ مقتول کا خیال تھاکہ ترکی میں سعودی حکام اس سے تفتیش یا گرفتارنہیں کریں گے تاہم انہیں یہ یقین تھا کہ سعودی قونصل خانے جانے پر کچھ مشکلات بڑھ سکتی ہیں۔
ترک میڈیا کو دیئے گئے انٹرویو میں ہٹائس سینگز نے کہاکہ خاشقجی سعودی قونصلیٹ نہیں جانا چاہتے تھے لیکن دستاویزات بھی ضروری تھی اور اس کے علاوہ کوئی آپشن بھی نہیں تھا، وہ 2017 سے امریکہ میں جلاوطنی کی زندگی گزار رہے تھے ۔
یادرہے کہ جمال خاشقجی نے اپنی سعودی اہلیہ کو طلاق دےدی تھی جس کے بعد اب وہ ایک ترک خاتون سے شادی کرنے جارہے تھے ، شادی کرنے کے لیے پہلی بیوی سے علیحدگی کی دستاویزات کے حصول کے لیے لندن سے ترکی پہنچی اور استنبول میں موجود سعودی قونصلیٹ میں گئے لیکن دوبارہ واپس باہر نہ آسکے اور اندر ہی قتل کردیاگیا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here