’آپریشن کے بعد بھی حساس حصے سے خون نکل رہاتھا اور ۔ ۔ ۔لاہور کے سرکاری ہسپتال میں خاتون مریضہ کو زیادتی کا نشانہ بنادیاگیا

0
29
rape-lahore-pakistan247news

لاہور(پاکستان 247نیوز) لاہور کے سروسز ہسپتال میں مبینہ طورپر نامعلوم ملازمین نے خاتون مریضہ کو زیادتی کا نشانہ بناڈالا جس پر مقدمہ بھی درج کرلیاگیا، متاثرہ خاتون کاکہناہے کہ آپریشن کے بعد جسم کے حساس حصوں سے خون نہیں رک رہاتھا اور جب دوسرے ہسپتال سے معائنہ کروایاتو زیادتی کا پتہ چلا۔

متاثرہ خاتون نے تھانہ شادمان پولیس کو دی گئی اپنی درخواست میں موقف اپنایاکہ پیٹ کے نچلے حصے میں درد کی شکایت کا سامنا تھا جس کے علاج کے لیے سروسز ہسپتال گئیںاور خواتین سرجیکل وارڈ ٹو میں داخل کیا گیا اوراگلی صبح آپریشن تھیٹر میں منتقل کیا گیا۔اسی دن شام 7 بجے ہسپتال سے ڈسچارج کردیا گیا لیکن انہیں اس وقت تک بھی درد کی شکایت تھی اور ان کے حساس اعضا سے خون بھی آرہا تھا جس پر ان کی ہمشیرہ نے خاتون کو شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں انہیں بتایا گیا کہ ان کا ریپ کیا گیا ہے۔

خاتون نے شادمان تھانے میں واقعہ کی شکایت درج کرائی اور پولیس کو بتایا کہ ہسپتال کے ملازمین نے ان کا ریپ کیا۔پولیس حکام کے مطابق خاتون کا میڈیکل کرایا گیا اور نمونے فورینزک سائنس ایجنسی کو بھجوائے گئے ہیں، رپورٹ کے بعد ہی معلوم ہوگا کہ خاتون کے ساتھ ریپ ہوا ہے یا نہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here